سوال اور جواب

سوال: گزارش یہ ہے کہ داعش جیسے انسان و اسلام دشمن گروہ جس نے حیوانیت کی بھی ساری حدیں پار کردیں ہیں یہ گروہ شیعوں کے تئیں بھی ناپاک ارادہ رکھتا ہے اس حیوان صفت گروہ سے مقابلہ کرنے کا کیا حکم ہے حکم کو صریح بیا ن کیجئے تاکہ مقلدین کو اپنا وظیفہ معلوم ہو سکے ۔

جواب: مسلمان دنیا کے کسی گوشے میں ہو اگر وہ یہ دیکھے کہ اسلام اور اس کے مقدسات معرض خطرے میں ہیں تو ایسی صورت میں اگر قدرت رکھتا ہو تو اس پر دفاع واجب ہے۔


سوال: کیا مدد کے عنوان سے سوریہ جانا ،اور دشمنوں سے مقابلہ کرنا جائز ہے؟

جواب: دین  کی مقدس چیزوں کا تحفظ کرنا جائز ہی نہیں بلکہ  بہتر ہے،   اور جو بھی مذہبی اور مقدس  جگہوں کی  حفاظت میں شہید ہو جائے  ان شاء اللہ وہ  خدا کے نزدیک اجر پائے گا  ۔  البتہ  اپنے ملک کے وزراء کی اجازت ، اور ان سے مشورہ لے


سوال:  موجودہ زمانے میں جدیدوسائل و طریقے ہیں جو نطفہ کو بطن مادر میں منعقد نہیں ہونے دیتے ، کیا ایسی صورت میں عورت پر [ جو عقد موقت میں ہے]  عدّہ گزارنا واجب ہے؟

جواب: اگر یائسہ نہیں ہوئی ہے عدّہ واجب ہے


سوال: حالت سفر میں ان روزوں کا رکھنا کیسا ہے  جو حصول ثواب کی خاطر رکھے جاتے ہیں

جواب: مسافرت میں نیت اقامت[ دس دن] کے بغیر روزہ صحیح نہیں ہے  لیکن اس وقت صحیح ہے جب کسی نے یہ نزر کی ہو کہ  وہ حالت سفر میں روزہ رکھے گا یا مدینہ منورہ  میں تین روز روزہ  رکھے


سوال: حقیر کو شادی کے تحاءف میں دس عدد کمبل اور چھ تکیہ ملی ہے ۔ ایک سال گذر چکا ہے لیکن یہ اشیاء استعمال میں نہیں آءی ہیں ۔ براءے کرم بیان فرماءیں کیا ان چیزوں پر خمس ہے یا نہیں ؟اگر واجب ہے تو کیا میں ان اشیاء کی قیمت بعنوان خمس ادا کرسکتا ہوں ؟ یا یہ کہ خو ان اشیاء میں سے خمس نکالوں؟

جواب : خمس کا واجب ہونا قطعی نہیں ہے ہاں بہتر یہ ہے کہ احتیاطاً ان اشیاء کی قیمت کا حساب کرکے خمس کو اپنے مرجع تقلید تک پہچاءیں۔


سوال: صاف ستھراءی کے ادارے کے جانب سے تمام افراد پر لازم ہے کہ اپنی صحت و سلامتی کی خاطر ان وسایل سے استفادہ کریں جن میں حفاظتی گوشے کا لحاظ رکھا گیا ہے ۔ اب اگر کوءی اس قانون پر عمل نہ کرے تو کیا ایسا شخص سورہ بقرہ آیہ ۱۹۵ کا مصداق کھلاءے گا؟

جواب: نہیں ایسا شخص اس آیت کا مصداق نہیں ہوگا۔ ہاں تمام ان مقررات کی رعایت کرنا ضروری ہے جنھیں صحت و سلامتی کے ادارے نے مقرر کیا ہے ۔


سوال: ائمہ اطہار علیہم السلام کے لئے سینہ زنی کرنے کی دلیل کیا ہے؟

جواب: ائمہ اطہار علیہم السلام کے بارے میں عزاداری کرنے کا رجحان اور استحباب ہونا انجمن میں اور مصائب امام حسین پر سینہ زنی کرنا عزاداری برپا کرنا کسی سے پوشیدہ نہیں ہے قرآن مجید میں ذکر ہوا ہے کہ حضرت یعقوب اپنے بیٹے یوسف کے فراق میں بہت عرصہ تک گریہ کرتے رہے کیا یہ بعنوان ایک عمل انسانی اور عاطفی طور پر بیان کرتے ہیں اس بنا پر ائمہ اطہار علیہم السلام کے پیروکار جس طریقے سے جو شرعاً جائز ہے اگر مجالس برپا کریں یا نذر کریں پس مجالس امام حسین پر سینہ زنی کرنا، امام حسین کی مظلومیت کو مجسم کر کے دکھاتے ہیں اور زیادہ سے زیادہ امام حسین سے محبت کرنا یہ ہمارے شعائر مذہب میں شمار ہوتا ہے لہٰذا تذکر دیتے ہیں کہ جیسا ابھی تک مرسوم ہے بزرگان مؤمنین کو خداوند عالم ان کی توفیقات میں اضافہ کرے اور مجالس دینی اور مذہبی تقریروں کو زیادہ اہمیت دینا چاہیے اور ایام محرم الحرام صرف عزاداری پر کفایت نہ کریں۔


سوال: عزاداری، سینہ زنی و زنجیر کرنا یا اس کے ذریعہ جم رنگ بدل جائے یا زخم ہوجائے حتی کہ خون جاری ہوجائے آیا جائز ہے؟

جواب: اس سوال کا جواب یہ ہے جواب اول سے معلوم ہوتا ہے البتہ عزاداران گرامی خداوند عالم ان کی توفیقات میں اضافہ کرے جہات شرعی اور عقلائی کی رعایت کریں اگرچہ خون نکالنے کا حرام ہونے پر کوئی دلیل نہیں ہے۔


سوال : مردوں کا نامحرم عورتوں کے مقابل میں ننگا ہونا جائز ہے یا نہیں ہے یا لوگوں کو جلب کرنے کے لئے اپنے آپ کو مار دیتے ہیں اس کا کیا حکم ہے؟

جواب: بہتر یہ ہے کہ بلکہ بعض موارد میں لازم میں ہے کہ عزاداری کرنے والے ننگے نہ ہوں اور ننگے ہونے کی حالت میں عزاداری نہ کریں بالخصوص اس مجالس میں جس میں خواتین دیکھ رہی ہیں اور اپنے آپ کو مارنے سے اجتناب کریں۔


سوال: ریا کے طور پر سینہ زنی و زنجیر زنی کرنا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: ائمہ اطہار کے لئے عزاداری کرنا عبادت ہے اور ریا کاری عمل کو باطل کردیتی ہے پس کوشش کریں کہ قصد قربت کے ساتھ عزاداری کریں۔


 سوال: مراسم عزاداری میں پرسہ دینا اور شبیہ نکالنا جائز ہے یا نہیں اور جائز ہونے کی صورت میں مردوں کے لئے عورتوں کا لباس پہننا اور ڈول باجا بجانا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: پرسہ دینا اور شبیہ نکالنا خود ایک ایسا کام ہے کہ شرعاً جائز ہے لیکن بنابر احتیاط مرد لوگ عورتوں کے لباس پہننے سے پرہیز کریں اور آلات موسیقی جو مخصوص مجالس لہو و لعب ہیں، اس کا مجالس عزاداری میں استعمال کرنا حرام ہے۔


سوال: نمایش اور عزاداری کے پرسہ میں اہل بیت علیہم السلام کے ساتھ تشبیہ دینا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: اگر کوئی تشبیہ دینے سے ائمہ اطہار کی بے حرمتی ہوتی ہے اور ان پر نقص لازم آتا ہے تو حرام ہے۔


سوال: کیا ماتم کرنا پرسہ دینے کے ساتھ فرق ہوتا ہے جبکہ دونوں رلانے کیلئے ہے؟

جواب: اگرچہ اصل میں پرسہ دینا ماتم کرنا جائز ہے لیکن ائمہ اطہار کے بارے میں ماتم کرنا ایک امر جو معصوم سے نقل ہوا ہے چنانچہ امام رضا نے دعبل خزاعی کو بتایا ہے۔


سوال: کالا لباس پہننا امام حسین اور دوسرے ائمہ اطہار کی عزاداری میں کیا رجحان شرعی رکھتا ہے؟

جواب: کالا لباس پہننا عزاداری امام حسین میں اور اپنے رشتہ دار کی مصیبت میں ایک رسم ہے اوریوم عاشورائے امام حسین میں اظہار غم کے لئے بہتر ہے۔


سوال: کیا پرسہ دینا اور حضرت زینبۖ کو اور امام سجاد کو بیمار بتانا اور مٹھائی پھینکنا اور باجا بجانا وغیرہ کا کیا حکم ہے۔

جواب: عزاداری امام حسین میں یا پرسہ دینے میں کوئی ایسا عمل کرنا جو ان کے مقام میں حقیر سمجھا جائے اور آلات موسیقی کا استفادہ کرنا اور مٹھائی پھینکنا مجالس عزاداری کی مناسب نہیں ہے لہٰذا ایسے اعمال جائز نہیں ہیں۔


سوال : کالے لباس کے ساتھ عزاداری امام حسین کے دوران میں نماز پڑھنا مکروہ ہے یا نہیں؟

جواب: عزاداری کے دوران میں کالے لباس کے ساتھ نماز پڑھنے میں کوئی حرج نہیں ہے، لیکن بعض روایات سے معلوم ہوتا ہے کہ ایام عزاداری میں کالے لباس کا پہننا مکروہ نہیں ہے۔


سوال: مراسم عزاداری اہل بیت میں جو علامات دیکھتے ہیں اس کے حکم کیا ہیں؟

جواب: ہماری نظر میں وہ علامتیں جو صلیب کی شکل میں ہیں خصوصاً وہ چیزیں جس پر حیوانات کے نقشے بنے ہوئے ہیں اشکال سے خالی نہیں ہیں لیکن وہ پرچم جو قدیم زمانے سے مرسوم ہے اس میں کوئی شکال نہیں ہے۔


سوال : عزاداری میں ڈھول بجانا اور باجا وغیرہ کا استفادہ کرنا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: ان چیزوں کا مراسم عزاداری میں استعمال کرنا بلکہ مطلقاً غیر عزاداری میں بھی استعمال کرنا اشکال سے خالی نہیں ہے۔


 سوال: انجمن اور عزاداری کے دستے میں وسائل موسیقی سے استفادہ کرنا کیا حکم رکھتا ہے؟

جواب: رسہ دینا اور شبیہ نکالنا خود ایک ایسا کام ہے کہ شرعاً جائز ہے لیکن بنابر احتیاط مرد لوگ عورتوں کے لباس پہننے سے پرہیز کریں اور آلات موسیقی جو مخصوص مجالس لہو و لعب ہیں، اس کا مجالس عزاداری میں استعمال کرنا حرام ہے۔


سوال: ایام سوگواری اہل بیت اور امام حسین کے دوران نماز مقدم یا عزاداری؟

جواب: البتہ نماز مقدم ہے کیونکہ نماز واجب ہے اور ارکان دین اسلام میں سے ہے لیکن عزاداری مستحب ہے اور واجب کو مستحب کے ساتھ مقائسہ نہیں کرنا چاہیے۔


سوال: بعض مجالس و محافل میں خواتین کی آواز مردوں تک پہنچ جاتی ہے کیا یہ عمل جائز ہے یا نہیں؟

جواب: اگر یہ عمل ریبہ اور سننے والوں کے لئے لذت نہیں ہے تو حرام نہیں ہے لیکن خداوند عالم نے فرمایا: وَِذَا سََلْتُمُوہُنَّ مَتَاعًا فَاسَْلُوہُنَّ مِنْ وَرَائِ حِجَابٍ (١) اگر عورتوں سے کوئی چیز مانگے تو پردہ کے پیچھے سے مانگے لازم ہے کہ خواتین کی مجالس میں ہوگا مجالس عزاداری میں خواتین کی عفت کی رعایت کرے تاکہ ان کی آواز مرد لوگ نہ سنیں۔

(١) احزاب آیت ٥٣۔


سوال: مرثیہ پڑھنے والے کو اپنے اشعار کے درمیان بغیر مدرک والے مطالب ذکر کرتے ہیں اور غنا کے ساتھ پڑھتے ہیں کیا اس کو پیسہ دینا جائز ہے یا نہیں اور کیا اجل عزاداری اس کا اخلاف کے ضمن میں حرام ہوتا ہے یا نہیں؟

جواب: بے مدرک مطالب اور غلط و اشعار غنائی کے مقابل میں پیسہ دینا صحیح نہیں ہے  لیکن اصل عزاداری اپنے اعمال کے ساتھ حرام نہیں ہوتا ہے البتہ مسلمان لوگ مرثیہ وغیرہ پڑھتے وقت مطالب واقعی اور صحیح پڑھنا چاہیے۔


سوال : خیمہ بنانا اور اس کو آگ جلانا صحیح ہے یا نہیں؟

جواب: مال کے ضایع ہونے کو لحاظ کرے تو یہ اشکال سے خالی نہیں ہے لیکن اگر کوئی آثار شرعی اور تبلیغی رکھتا ہو تو جائز ہے بلکہ ایک اچھا کام اور مطلوب ہے۔


 سوال: کپڑا اور رومال وغیرہ ایام محرم میں علامت کے طور پر باندھتے ہیں کیا یہ بیچنا اور اس کی قیمت مسجد اور امام بارگاہ کی تعمیر میں خرچ کرنا جائز ہے یا نہیں؟

جواب: اگر کوئی شخص کپڑا اور رومال وغیرہ باندھتا ہے لیکن اس کا کوئی خاص نظر نہیں ہے تو ان موارد میں خرچ کرنا جائز ہے۔


سوال: مراسم عزاداری اور محفل وغیرہ شوہر کی اجازت کے بغیر برپا کرنا کیا حکم رکھتا ہے؟

جواب: اگر حق شوہر کے ساتھ کوئی منافات نہیں رکھتا ہے اور عورت اپنی منزل میں جو شوہر کے ساتھ مربوط نہیں ہے اس میں عزاداری اور محفل برپا کرے تو اشکال نہیں ہے۔


سوال: تالی بجانا مراسم محفل میلاد ائمہ اطہار علیہم السلام میں اور اعیاد مذہبی مسجد میں برپا کرنا اور مسجد کے باہر برپا کرنا کیا حکم رکھتا ہے۔؟

جواب: تالی بجانا اصل میں حرام نہیں ہے لیکن مناسبات مذہبی میں خصوصاً مساجد میں ان کی حرمت کی رعایت کرنے کے لئے ان چیزوں سے اجتناب کرے۔ والسلام علیکم و رحمة اللہ و برکاتہ


سوال:  آیا جائز ہے کہ کسی کو چند مثقال سونا یا اس کا سکہ بطور قرض دیں اور پھر اسی مقدار واپس لیں جبکہ اس کی قیمت بڑھ چکی ہے۔

جواب: آہاں جائز ہے۔


سوال: کیا اس پیسے پر خمس واجب ہے جنہیں ضروری اشیاء جیسے گھر کی خرید کے لئے جمع کیا گیا ہے؟

جواب؛ اگر ایک سال کی مدت تمام ہو گئی ہے تو واجب ہے۔


سوال:  استخارہ دیکھنے میں احتیاط کرنا چاہئے؟

جواب: ہر کام کے لئے تسبیح یا قرآن سے استخارہ نہیں کرنا چاہئے، ہاں حیرت کے وقت استخارہ حسن ہے اس شرط کے ساتھ کہ آیات کے معانی اور مفاہیم سے واقفیت رکھتا ہو۔


سوال:  وہ شخص جو احتیاط پر عمل کرتا ہو اس کے لئے اپنی پونجی کو سرکاری یا پرائیوٹ بینک میں رکھنا کیسا ہے؟

جواب: سرکاری بینکوں میں رقم جمع کرانا خلاف احتیاط ہے اگر چہ ہمارے نزدیک جائز ہے۔


سوال:  مقلدین کا اپنے علاوہ دوسرے مراجع یا ان کے وکلاء کو وجوہات ادا کرنا صحیح ہے؟ جیسے وہ شھر جہاں مقلد کے مرجع کا دفتر اور وکیل نہ ہو؟

جواب: تمام مراجع جامع الشرایط کو مومنین وجوہات دے سکتے ہیں اس شرط کے ساتھ کہ جب مصرف ایک ہو۔


سوال:  آیا امام زمانٕٕ﴿عجل الله تعالی فرجہ الشریف﴾ کا ظہور صیحہ آسمانی پر متوقف ہے یعنی صیحہ آسمانی سے پہلے آپ ﴿عجل الله تعالی فرجہ الشریف﴾ ظہور نہیں کریں گے؟

جواب: حضرت ٕ﴿عجل الله تعالی فرجہ الشریف﴾ کے ظہور کی بہت سی علامتیں ہیں ان میں سے ایک قسمی علامت آسمانی ہے۔


سوال:  آیا ائمہ پیدائش کے وقت سے ہی عقل بالفعل تھے؟ ذات احدیت کے سلسلے سے ان کا ادراک شہودی تھا؟

جواب: بعض روایات سے اسی مطلب کا استفادہ ہوتا ہے۔


سوال:  معاذ بن جبل کون تھے؟

جواب: معاذ بن جبل اصحاب پیغمبر ﴿صل الله علیہ و آلہ﴾  میں سے ایک با رسوخ شخصیت کے حامل تھے جنہیں پیغمبر﴿صل الله علیہ و آلہ﴾ امر قضاوت کی ادائیگی کے لئے یمن بھیجا تھا اور حکمت آمیز کلمات بھی ان کے حوالے کئے تھے لیکن رحلت پیغمبر﴿صل الله علیہ و آلہ﴾ کے بعد حضرت علی علیہ السلام اور حضرت زہرا ﴿سلام اللہ علیہ﴾ کی نصرت نہیں کی در نتیجہ ان دو حضرات کی ناراضگی کا داغ دامن کردار پر لگا۔


سوال: مندرجہ ذیل الفاظ  ﴿نازعات﴾، ﴿ناشطات﴾، ﴿راجفہ﴾، ﴿رادغہ﴾ قرآن میں کن معانی میں استعمال ہوئے ہیں؟

جواب: نازعات؛ ان فرشتوں کو کہا جاتا ہے جو کفار کی ارواح کو شدت کے ساتھ قبض کریں گے۔

ناشطات؛ ان فرشتوں کا کہا جاتا ہے جو مومنین کی ارواح کو لطف و نرمی کے ساتھ قبض کریں گے۔

راجفہ؛ وہ بزرگ صیغہ جو اسرافیل کے صور اول سے حاصل ہوگی۔

رادفہ؛ وہ صدا جو اسرافیل کے صور دوم سے حاصل ہوگی۔


سوال: کیا مستحب غسل کر کے نماز پڑھی جا سکتی ہے یا وضو کرنا بھی ضروری ہے؟

جواب: وہ غسل جو ماثور ﴿یعنی جن کا استحباب ثابت ہے﴾ ان کے بعد وضو کی ضرورت نہیں ہے لیکن ایسے غسل جو قصد رجاء کے ہمراہ کئے جاتے ہیں وہ مکلف کا ذمہ وضو سے بری نہیں کرتے۔


سوال: وہ رقوم و اموال جو گھر یا شادی کے لئے جمع کئے گئے ہوں کیا ان پر خمس ہے؟

جواب: اگر ایک سال گذر چکا ہو ایسی صورت میں خمس ان اموال پر ہے۔


سوال: ان النبی صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم ؛ نھیٰ ان یلقی السم فی بلاد المشرکین۔

جو مختلف فقہی کتب میں نقل ہوئی ہے اور جس سے یہ استفادہ کیا جاتا ہے بلاد مشرکین میں  زہر کا استعمال حرام ہے کیا اس حدیث سے ایٹمی بم، اور زہریلی گیس کے استعمال کو حرام قرار دیا جا سکتا ہے؟

جواب: مذکورہ روایت ان موارد کو بھی شامل ہے۔


سوال: فلسفہ کا پڑھنا اور پڑھانا کیا حکم رکھتا ہے؟

جواب: سب کے لئے اس علم کا پڑھنا اشکال سے خالی نہیں ہے ہاں اگر انسان مبانی اسلامی پر تسلط رکھتا ہو ایسی صورت میں کوئی حرج نہیں ہے۔


سوال: کیا شیعوں کا وہ گروہ جو گناہوں میں مرتکب ہوتے ہیں ہم ردیف ہیں، یہود و نصاریٰ اور اہل تسنن کے؟ یعنی سب ایک حکم رکھتے ہیں؟

جواب: سب ایک حکم نہیں رکھتے۔


سوال: کیا شہادت ثالثہ جز٫ تشہد ہے؟

جواب: نہ تو یہ جز٫ تشہد ہے اور نہ ہی اس پڑھنا تشہد میں جائز ہے۔


سوال: غضب الٰہی سے کیا مراد ہے؟

جواب: غضب الٰہی سے مراد خدا کا انتقام اور عذاب ہے جو گناہوں کی نسبت فرق کرتا ہے یعنی اگر کوئی گناہ خاص کا مرتکب ہوتا ہے وہ عذاب خاص اور انتقام کا مستحق ہے۔


سوال: عقد فضولی کسے کہتے ہیں؟

جواب: ایک عقد جو مالک کی اجازت کے بغیر پڑھا جائے اس امید کے ساتھ کہ بعد میں مالک کی اجازت حاصل کر لی جائے گی۔


سوال: وہ معاہدے جو بیمہ کمپنیوں کی جانب سے مختلف صورتوں میں وجود میں آتے ہیں۔ جس کے نتیجہ میں کمپنیاں زائد رقم ادا کرتی ہیں حکم ربا رکھتے ہیں؟

جواب: معاہدوں کے پیش جو زائد رقم بیمہ کمپنیاں ادا کرتی ہیں، ربا کے زمرہ میں داخل نہیں ہیں۔


سوال: قمہ زنی کے سلسلے میں حضرت آیہ اللہ العظمیٰ دوز دوزانی  کا نظریہ؟!

جواب: محرم الحرام کے نزدیکی دنوں میں حضرت آیہ اللہ العظمیٰ  دوز دوزانی  کے درس خارج میں حدیث[ لا ضرر ولا ضرار] کے سلسلے میں بحث و گفتگو جاری تھی  اسی مناسبت سے آپ نے فرمایاکہ قمہ زنی اضرار کے مصادیق میں سے نہیں ہے اسی وجہ سے قمہ زنی کا حکم اوّلی حرمت نہیں ہے  ہاں حکم ثانوی جس کا تعلق  زمان و مکان کی شرائط کے مطابق ہوتا ہے  حکم قمہ زنی ممکن ہے حرام یا مستحب ہو